عمران خان نیازی کی پارٹی نے پاک فوج کے خلاف مہم چلائی، وزیرداخلہ رانا ثنااللہ

Rana Sannaullah Photo Aaj Tv 640x480
Rana Sannaullah Interior Minister Pakistan. Photo: Aaj Tv

فیصل آباد: پاکستان کے وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے اپنے ایک تازہ ترین بیان میں کہا ہے کہ پاک فوج کے خلاف پروپیگنڈا اور منفی مہم عمران خان نیازی کی پارٹی نے منفی مہم چلائی جس سے ان کی ملک دشمنی سامنے آتی ہے، وزیرداخلہ نے اس موقع پر مزید کہا کہ پی ٹی آئی نے 13 اگست کو قانون توڑا تو 25 مئی سے بھی برا حشر ہوگا۔
مردان ٹائمز کے مطابق پاکستان کے وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے کہا ہے کہ ایک طرف پوری پاکستانی قوم پاک فوج کے شہدا کے ساتھ کھڑی ہے، اور کہا کہ پاک فوج کے تمام شہدا کو سلاف پیش کرتا ہوں، جبکہ دوسری طرف پی ٹی آئی کارکنان پاک فوج کے شہدا کے خلاف منفی مہم چلا رہی ہے۔
وفاقی وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے فیصل آباد میں میڈیا سے گفتگو کے دوران کہا کہ فوج کے خلاف منفی پروپیگنڈا کرنے والے گمراہ ہیں، انھوں نے مزید کہا کہ پاک آرمی کے شہدا کے خلاف ایسی گندی مہم چلانے والوں کی نشاندہی ہوگئی ہے۔ وفاقی وزیرداخلہ نے مزید کہا کہ عمران نیازی کی پارٹی نے پاک فوج کے خلاف منفی مہم چلائی اور منفی پروپیگنڈا کیا، انھوں نے کہا کہ اس مہم سے ان کی ملک دشمنی سامنے آتی ہے۔
فیصل آباد میں میڈیا سے گفتگو کے دوران رانا ثناء نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کا چیرمین قوم کو تقسیم کر رہا ہے، انھوں نے کہا کہ عمران ںیازی پاکستان کے نوجوانوں کو اور پوری قوم کو گمراہ کر رہا ہے۔ وفاقی وزیرداخلہ نے مزید کہا کہ پاکستان کے الیکشن کمیشن نے فارن ایجنٹ کے طورپر عمران خان کی شناخت کی ہے۔
وفاقی وزیرداخلہ نے میڈیا سے گفتگو کے دوران مزید کہا کہ الیکشن کمیشن کے فیصلے کے بعد اس کا دماغی توازن بگڑ گیا ہے اور اس بات میں اب کوئی شک نہیں رہا۔ انھوں نے اس موقع پر مزید کہا کہ اگرعمران خان کو نہ روکا گیا تو یہ پوری پاکستانی قوم کو کسی بڑے حادثے سے دوچار کر دے گا۔
وفاقی وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے کہا کہ الیکشن کمیشن کے فیصلے کے بعد ثابت ہوگیا کہ عمران نیازی غیرملکی ایجنٹ ہے۔ انھوں نے کہا کہ پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان نیازی نے گمراہی میں جو باتیں کی ان کی صرف مذمت ہی کی جا سکتی ہے یہ باتیں دہرائی نہیں جاسکتیں اور نہ ہی یہ باتیں دہرائی جانے والی ہیں۔
وفاقی وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے کہا کہ اس تین یا چار روز پہلے پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نیازی نے خود کہا تھا کہ موجودہ الیکشن کمیشن کی موجودگی میں ہم الیکشن نہیں لڑیں گے۔ وفاقی وزیرداخلہ نے مزید کہا کہ پہلے چیف الیکشن کمیشن کو تو ہٹالیں، پھرپنجاب اور خیبرپختونخوا کی اسمبلیاں توڑیں، اس کے بعد جو استعفے دیے ہیں وہ منظور کرائیں اس کے بعد انتخابات کی بات کریں۔
وفاقی وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے فیصل آباد میں میڈیا سے گفتگو کے دوران مزید کہا کہ افغانستان میں ڈرون حملہ ہوا ہے، لیکن افغانستان میں طالبان کی حکومت نے کبھی پاکستان پر ایسا الزام نہیں لگایا لیکن یہ بدبخت، احسان فراموش اور جھوٹا انسان پاکستان میں رہتے ہوئے پاکستان پر الزام عائد کرتے ہیں۔
وفاقی وزیرداخلہ رانا ثنااللہ نے کہا کہ اگر پی ٹی آئی والے 13 کو لیاقت باغ یا پریڈ گراؤنڈ میں جلسہ کرنا چاہتے ہیں تو کریں لیکن یہ بات یاد رہے کہ 13 اگست کو پی ٹی آئی کو صرف پرامن جلسے کی اجازت ہے، اس کے علاوہ اگر پاکستان تحریک انصاف والوں نے قانون توڑا اور دھونس و دھمکی کا راستہ اپنایا تو 25 مئی سے زیادہ برا حشر ہوگا۔

Related Posts