پاکیستان کی خارجہ پالیسی امریکہ کے زیر اثر ہے، حکومت کا اعتراف

Moeed Yousaf 640x480

اسلام آباد: وزیر اعظم عمران خان کے قومی سلامتی کے مشیر ڈاکٹر معید یوسف نے کہا ہے کہ جب تک پاکستان قرض لیتا رہے گا، ہماری خارجہ پالسی آزاد نہیں ہوگی.
مردان ٹائمز کے مطابق وزیراعظم کے قومی سلامتی کے مشیر ڈاکٹر معید یوسف نے اعتراف کیا ہے کہ پاکستان کی خارجہ پالیسی امریکہ کے زیر اثر رہی ہے. انھوں نے کہا کہ دنیا میں شاید ہی کوئی ملک ہو جس کی خارجہ پالیسی مکمل طور پر آزاد ہو.
اس حوالے سے انھوں نے مزید کہا کہ ہمیں اخراجات پورے کرنے کے لئے بیرونی دنیا سے قرضے لینے پڑتے ہیں. اور یہی وجہ ہے جس کی وجہ سے ہمیں معاشی خودمختاری پر سمجوتہ کرنا پڑتا ہے.

Share on facebook
Share on twitter
Share on linkedin
Share on pinterest
Share on whatsapp

Related Posts